متحدہ قومی مومینٹ کے قائد الطاف حسین جو کہ پاکستان کے %98 مظلوم محکوم اور غریب متوسط طبقے کی عوام کے قائد ہیں اور پچھلے 22 سال سے برطانیہ  میں جلا وطن ہیں مگر اس کے باوجود جس طرح سے انھوں نے اپنی قوم اپنی عوام اور اپنے کارکنان کو یکجا اور منظم  کیا ہوا ہے جسکی کوئی  مثال  نہیں ملتی  نہ تاریخ میں ایسا  کوئی  قائد تھا نہ ہے نہ ہوگا الطاف  حسین ایک عظیم  قائد ہیں جنکے ہزاروں نہیں لاکھوں نہیں  چاہنے  والے ہیں جو  انکے ایک اشارے پر اپنی جان دینے کے لیے تیار  بیٹھے ہیں گذشتہ  چند سالوں سے عالمی قوتیں الطاف حسین کے خلاف  سازشوں کے جال بچھانے میں مصروف ہیں اندرونی و بیرونی  قوتیں پریشان ہیں الطاف حسین  جو کہ 22 سالوں سے  اپنی  عوام سے دور ہیں اسکے باوجود انکی ایک آواز پر کروڑوں لوگ اکھٹے ہوجاتے ہیں اور الطاف حسین  ہی ہیں جس کی وجہ  سے دیگر ممالک پاکستان پر اتنی آرام سے میلی آنکھوں سے  نہیں دیکھ سکتے کیونکہ بیرونی قوتیں خوف زدہ  ہیں اس قائد سے جس کے پاکستان میں کروڑوں چاہنے والے ہیں  پاکستان کی محبت ہی ہے جس کی وجہ سے  آج الطاف  حسین کو عالمی اسٹیبلشمینٹ اپنی سازشوں کے جال میں پھنسانے کی  کوشش کررہی ہے مگر الطاف حسین کے  لیے اور انکے  کارکنان کے لیے  فخریہ  بات تو  یہ  ہے  کہ  ماضی میں الطاف حسین  کو  جھکانے اور خریدنے کی بہت کوشش کی مگر الطاف حسین ایک ایسا قائد ہے جو کبھی نہ جھکا ہے اور نہ کبھی بکا ہے .الطاف حسین ایک ایسا قائد  ہے جس نے  جاگیردار  وڈیروں کو پاکستان میں لگام اور انکی سوچ کو  شکست  دی اور یہ شکست صرف جاگیرداروں  وڈیروں  ہی  کی نہیں بلکہ  یہ انگریزوں کی  سوچ اور انکے غلاموں کی شکست تھی جسکو صرف الطاف حسین نے اپنے نظریے اور اپنے عزم و حوصلے اور قربانیوں سے شکست  دی عالمی اسٹیبلشمنٹ کو الطاف  حسین  کی یہ بات ایک آنکھ  نہیں بھاتی کہ وہ  غریب محکوم عوام کے  حقوق کی بات کرتے ہیں .

 

Image    Image   Image  

آج بھی اسٹیبلشمنٹ الطاف حسین کو ہر طرح سے سازش کا نشانہ بنا رہی ہیں ایسے الزام لگاے جارہے جس کی تردید ماضی کے  مخالفین  بھی کرچکے  ہیں کہ ہم نے الطاف حسین کو خریدنا چاہا مگر الطاف حسین نے انکار کردیا اور نوٹوں سے بھرا بریف کیس واپس کردیا .اور آج عالمی اسٹیبلشمنٹ نے الطاف  حسین پر منی لانڈرنگ کا الزام لگا کر الطاف حسین  اور  پاکستان کی مظلوم عوام کے حوصلے پست کرنے کی کوشش  کررہی ہے  مگر قومی  و  بین الاقوامی اسٹیبلشمنٹ  بھول  رہی  ہے الطاف حسین نہ جھکا ہے اور نہ جھکے گا .الطاف حسین ایک بہادر  قوم کا بہادر عظیم قائد ہے .
اگر عالمی اسٹیبلشمنٹ سمجھتی ہے کہ وہ الطاف  حسین  کو حراست  میں لے کر پاکستان کی عوام اور الطاف  حسین کے حوصلے پست  کردینگے تو  یہ انکی خوش فہمی ہے الطاف حسین نے ماضی میں بھی ایسی آزمائشوں حالات اور قیدو بند کی صعوبتوں  کا سامنا بہت بہادری سے کیا ہے یہ حالات الطاف حسین  کے لیے نئ بات نہیں ہے  ہر بار کی طرح اس بار بھی الطاف حسین سرخرو ہوکر اپنی عوام کے ساتھ ہونگے  الطاف حسین کے چاہنے والوں کی چاہت دیکھیے  جب سے انکا قائد اپنے گھر سے باہر  ہے تب سے لیکر آج تک انکے  کارکنان بھی اپنے گھروں سے باہر  ہیں اور اپنے قائد  کی صحت و خیریت کے لیے پریشان ہیں اور 4 روز سے پورے  پاکستان میں مختلیف شاہراہوں پر دھرنا دیے ہوے اور دھرنے کے شرکاء  کا صرف اتنا کہنا ہے کہ جب تک وہ اپنے قائد کی آواز نہیں  سن لیتے  تب تک ایسے ہی سڑکوں پر بیٹھے رہینگے  یہ  ہے الطاف حسین کے لیے محبت
یہ دھرنے عالمی قوتیں دیکھ لیں  الطاف حسین  کے پاس عوام کی محبت کی کروڑوں  کی دولت موجود  ہے  اس محبت  کے ہوتے ہوے عالمی قوتیں  اور اسٹیبلشمنٹ کبھی   اپنے  مقاصد میں کامیاب نہیں ہوسکتیں الطاف حسین ایک شخصیت ہی نہیں ایک قوم نطریے  فلسفہ ایک   قوم  اور تحریک کا نام ہے جسے عالمی قوتیں کبھی شکست نہیں دے سکتیں .

ہمیشہ حق و باطل کی جنگ میں فتح حق کی ہوئ ہے اوروقت نے ایک بار پھر ثابت کردیاالطاف حسین کی تحریک اور جدوجہد حق وسچ پر مبنی  ہے اور 3 جون کو جو باطل  قوتوں نے سازش کی تھی آج انھیں ایک بارپھر منہ کی کھانی پڑی اور الطاف سے یکجہتی کے لیے 4 روز سے جاری دھرنوں کے شرکاء کی دعائیں رنگ  لے آئی جس قائد کے لیے دن رات بیٹھے تھے جس کی آواز کو سننے کے لیے بیٹھے تھے اور وہ گھڑی آہی گئ اور باطل قوتوں کو اپنے عزم وحوصلے سے گھٹنے ٹیکنے پر مجبور کردیا تاریخ نے ایک بار پھر ماہ جون کو تاریخی بنادیاہے  جون جس میں قائد تحریک الطاف حسین نے 11 جون 1978 کو طلبہ تنطیم اے پی ایم ایس او کی بنیاد رکھی ، 19 جون 1992 کا  بدترین ریاستی آپریشن اور پھر 3 جون 2014 جب الطاف حسین عالمی اسٹیبلشمنٹ  نے  منی لانڈرنگ کا  الزام لگایا اور اس آزمائش میں بھی الطاف حسین ہمیشہ  کی طرح سرخرو ہوے 7 جون 2014 میٹروپولیٹن  پولیس نے الطاف حسین کو رہا کردیا .مخالفین الطاف اب سازش کرنا  بند کردیں .عالمی قوتیں دیکھ لیں جس طرح  آپ کو اس بار شکست کا منہ دیکھنا پڑا اسی طرح  ہمیشہ  شکست ہوگی

Image    Image   Image

Advertisements