ایم کیو ایم پاکستان کی چوتھی بڑی سیاسی جماعت ہے  اور پاکستان کے غریب متوسط طبقے کی واحد نمائندہ جماعت ہے اور اس جماعت کی سب سے بڑی خصوصیت یہ  بھی ہے کہ اس کا قائد کوئی جاگیردار وڈیرہ نہیں  بلکہ ایک غریب متوسط طبقے کی آبادی  سے تعلق رکتھا ہےاور اس قائد کا نام ہے الطاف حسین .الطاف حسین پاکستان کے واحد لیڈر اور قائد ہیں جنھوں نے اپنی تحریک کا آغاز  اپنی طالب علمی کے دور سے کیا اور ایک طلبہ تنظیم  سے ایک سیاسی جماعت ایم کیو ایم کو جنم دیا جس کے بعد سے انکے خلاف سازشوں کے انبار  لگادیے گیے .الطاف حسین  ایک واحد لیڈر ہیں جس نے عام پڑھے لکھے لوگوں کو ملک کی قانون  ساز اسمبلیوں تک پہنچایا .الطاف حسین نے کبھی کوئی سیاسی و تحریکی عہدہ اپنے لیےیا اپنے کسی رشتہ دار کے لیے نہیں رکھا اور سب کچھ اپنے کارکنان کو دیا اور سب کچھ اپنے کارکنان پر نچھاور کردیا اور اپنے کارکنان و عوام سے محبت کرنے والا قائد صرف الطاف حسین ہے جس کے کارکنان و عوام بھی اپنےقائد سے والہانہ محبت کرتے ہیں اور اپنے قائد  کے  لیے جان دینے کے لیے بھی تیاربیٹھے ہیں الطاف حسین کو اپنی اس حق پرستی کے سفر میں بہت کٹھن حالات سے گزرنا پڑا اس حق پرستی کے اس سفر میں الطاف حسین  کے  بھائی بھتیجے اور دیگرکارکنان کا لہو بھی شامل ہے الطاف حسین اور ایم کیو ایم نے مل کر بہت سے  مشکل حالات  کا سامنا کیا الطاف حسین اور ایم کیو ایم کی تاریخ قربانیوں اور  مشکل و کٹھن حالات سے بھری پڑی ہے  ایک بار پھر الطاف حسین اور ایم کیو ایم پر ایک آزمائش اور امتحان کی گھڑی  ہے 03-06-2014 منگل کا دن الطاف حسین کے چاہنے والوں کے صبر کی آزمائش کا دن تھا جب پاکستان میں میڈیا  کے زریعے  پتہ چلا کہ لندن کی میٹروپولیٹن پولیس الطاف حسین بھائی کے گھر منی لانڈرنگ کیس  میں سرچنگ کے لیے آئی اور الطاف حسین بھائ کو اپنے ساتھ لے گئ یہ  بات پاکستان میں جنگل میں آگ کی طرح پھیل گئ اور الطاف حسین کے چاہنے والوں میں افسردگی پھیل  گئ اور الطاف  حسین  کے  کارکنان   اپنے قائد کی طبیعت و خیریت   کے حوالے سے بے چین ہیں اور اپنے قائد  کے ساتھ ہونے والی ناانصافی پر بہت غصہ ہیں کہ انکے  ساتھ  ایسا سلوک کیوں جس نے ماضی  میں نوٹوں سے بھرے بریف کیس کو ٹھکرا دیا آج برطانیہ کی  میٹرو پولیٹن پولیس  عمران  فاروق بھائ شھید کے قاتلوں کا پتہ نہیں لگا سکے تو اسکاٹ لینڈ یارڈ  کی ناکامی  کو چھپانے کے لیے الطاف  حسین پر منی لانڈرنگ کا چارج لگانے کی سازش کررہی  ہے جو قابل مذمت ہے .آج دو  دن ہوگئے اور الطاف حسین  کے چاہنے والے پورے پاکستان کی اہم شاہراہوں اور مختلیف پریس کلبوں پر دھرنا دیے ہوۓ  اور الطاف حسین کے جاہنے  والوں کا بس اتنا کہنا ہے کہ جب تک وہ اپنے قائد کی آواز نہیں سن لیتے تب وہ دھرنا دیے بیٹھے رہینگےلاکھوں کروڑوں عوام کا اپنا گھر بار چھوڑ کر سڑکوں پر  بیٹھنا اس بات کی  دلیل ہے کہ  قومی و بین الاقوامی  اسٹیبلشمنٹس جتنی چاہیں  سازشیں کرلیں عوام کے  دلوں  سے الطاف حسین کی محبت کوئ ختمِ نہیں کرسکتا  الطاف حسین کروڑوں عوام  کی دھڑکن ہے آج پورے  پاکستان  میں جاری دھرنے دیکھ  لے برطانیہ کی اسٹیبلشمنٹ  جس کے اتنے چاہنے والے ہوں اسکا کوئ سازشی بال  بھی بانکا نہیں کرسکتے

Image    Image

 

الطاف حسین کے پاس کارکنان کی محبت کی بہت بڑی دولت موجود ہے الطاف حسین کے کارکنان اپنے قائد سے بہت محبت کرتے ہیں اور پاکستان  میں الطاف حسین کے لیے لوگ صرف دھرنا نہیں بلکہ اپنے قائد سے محبت اور یکجہتی کے لیے اپنے گھر بار چھوڑ کر سڑکوں پر بیٹھے ہیں الطاف حسین ایک شخصیت ہی نہیں بلکہ ایک تحریک ہے اور وہ تحریک و تاریخ ساز شخصیت الطاف حسین ڈیوڈ کیمرون صاحب آپکے برطانیہ میں ہماری امانت کے طور پر آپکے پاس ہے جو پاکستان کے کروڑوں عوام کے دلوں کی دھڑکن ہے ایسے قیمتی قائد کی حفاظت آپکی زمہ داری اور  فرض ہے
ایم کیو ایم اور الطاف حسین پہلے بھی  ایسی کئ سازشوں کا سامنا کر چکے ہیں اور اس آزمائش کی گھڑی میں بھی الطاف حسین کے کارکنان یکجا ہوکر تمام سازشوں کو ناکام بنادینگے

ایم کیو ایم کے دھرنوں میں الطاف حسین سے  یکجہتی کے لیے دیگرسیاسی و مذہبی و دینی جماعتوں کے وفود نے بھی شرکت کرکے برطانیہ اور اسکی اسٹیبلشمنٹ کو کھلا پیغام دیاہے کہ الطاف حسین اکیلے نہیں بلکہ پاکستان کی تمام عوام الطاف حسین کے ساتھ ہیں اور کوئ اس مشکل وقت میں الطاف حسین کو تنہا نہیں سمجھے

Image

 

Advertisements