میرا قائد صرف الطاف حسین ہے جس نے مجھے اور میری قوم کو  سر اٹھا کر جینے کا حوصلہ دیا جس نے میری قوم کو اور تمام آنے والی نسلوں کو پہچان دی الطاف حسین صرف میرا لیڈر ہے اور میں ہوں پاکستان کی٪۹۸ فیصد مظلوم محکوم عوام جس کی الطاف حسین آواز  ہے الطاف حیسن ایسا قائد اور ایسا رہنما ہے جس نے ہر مظلوم کے حقوق کے لیے ہر سطح پر آواز بلند کی جس نے تمام قومیت کو ایک پرچم تلے جمع کیا اور آپس میں اتحاد اور محبت کا پیغام دیا اور یہ بات قابل فخر ہے کہ یہ شخص کوئ سرمایایہ دار جاگیردار وڈیرہ نہیں بلکہ ایک متوسط طبقے سے تعلق رکھنے والا ایسا شخص ہے جس نے  اپنی کم عمری میں  غریب محکوم اور حقوق سے محروم قوم کے لیے  جدوجہد کا آغاز اپنے تعلیمی ایام سے کیا جب ایک طبقہ قوم کو اسکے تعلیمی حقوق سے محروم رکھا جارہا تھا  ایسے  میں 11 جون 1978 کو مہاجروں کے لیے الطاف حسین نے پوری قوم کے نوجوانوں کے حقوق کے حصول کے لیے طلبہ تنظیم اے پی ایم ایس او کی بنیاد رکھی جو ایک انقلابی تحریک ہے یہ پاکستان میں غریب متوسط اور حقوق سے محروم عوام کے  لیے انقلاب کی سنگ بنیاد ثابت ہوا اور مشکلات اور کٹھن مسافتوں کو عبور کرتے ہوے یہ انقلاب گلیوں محلوں تک جا پہنچا اور پھر پوری مہاجر قوم الطاف حسین بھائ کی قیادت میں ایک پرچم تلے جمع ہوگئی اور پھر 18 مارچ 1984 مہاجر قومی موومنٹ کے قیام کا اعلان کیا گیا الطاف حسین جس نے پہلے طلبہ تنظیم کی بنیاد رکھی اور پھر اپنی حق پرستی اور انقلابی سوچ کے زریعے گلی محلوں میں اپنی قوم تک اپنا پیغام پہنچایا جس سے مہاجر  قوم ایک پلیٹ فارم پر جمع ہوئ اور اپنے حق پرستی کے سفر کو آگے بڑھایا اور غریب مظلوم محکوم عوام پڑھے لکھے با شعور طبقے کو ایوانوں میں جاگیر دار  وڈیروں اور سرمایہ داروں  کے سامنے لا کھڑا کیا جس سے ان جاگیرداروں وڈیروں کی بنیادیں ہل گئ اور ایسا انقلاب برپا کیا جس کے بعد سے آ ج  تک وہ انقلاب اپنی منزل کی جانب  بڑھ  رہا ہے الطاف حسین ایک ایسا لیڈر  ہے میرا  جو کہتا ہے وہ کر تا  ہے اور پھر الطاف حسین کا حق پرستی کا پیغام پھیلتے ہوے پاکستان کے  تمام قومئت اور تمام طبقات جا پہنچا اور  پھر قائد تحریک محترم جناب  الطاف حسین بھائ  نے 25 جولائ 1997  کو مہاجر قومی موومنٹ  کو  متحدہ قومی موومینٹ میں تبدیل کرنے کا  اعلان کیا .آج متحدہ  قومی موومینٹ  اور  بانی  و  قائد تحریک  محترم الطاف حسین بھائ سے  تمام  مکاتب فکر تمام قومیت تمام اور تمام طبقات  کے لوگ  محبت کرتے ہیں اور  وہ سب کے  قائد ہیں .الطاف حسین بھائ نے اے پی ایم ایس  او سے  ایم کیو ایم کے قیام تک بہت قربانیاں  دیں اپنی جوانی  و پوری زندگی اپنی قوم اور  پاکستان   کے نام کردی اور تحریک کے شھید و  اسیر  ساتھی  تحریکِ کا اثاثہ   ہیں  جنکی شھادتوں نے   تحریک  کو جلا بخشی .

Image  Image

Image

قائد تحریک  محترم جناب  الطاف حسین ایک عظیم لیڈر اور ایسے رہنما ہیں  جس نے ہر مشکل  وقت میں  اپنی قوم کا ساتھ دیا اور اپنی عوام سے بہت محبت کرنے والا قائد ہے جس نے اپنی قوم کو ترقی کی جانب لے جانے کیلیے شعور بیدار کیا جو باعث فخر ہے  دنیا کی ہر قوم اپنے تخلیق کارو تاریخ ساز ہیرو پر فخر کرتی ہے  مثال کے طور پر فرانس، نپولین اور ژان ساتر پر فخر کرتا ہے   ، برطانیه شیکسپیئر  چرچل  پر فخر کرتا ہے اور برصغیر  میں مسلم انڈیا کو امیر خسرو مرزا غالب  میر تقی میر  سراج الدولہ حسرت موہانی اور سر سید احمد خان پر فخر ہے اسی طرح مسلم انڈیا کے وارث بانیان پاکستان نے الطاف حسین بھائ کو جنم دیا جس پر بانیان پاکستان کو فخر کہ جس نے گو انسانی تاریخ  کے لاثانی نظریہ  ساز قائد ہیں یہ  ہی  وجہ ہے  کہ ہمیں منزل  نہیں  رہنما چاہیے  الطاف حسین قوم  کے قائد ہی نہیں غرور بھی ہیں اور  ہمارا نطریہ صرف الطاف حسین بھائ  ہئں الطاف حسین کا دیا  ہوا نظریہ حقیقت پسندی اور عملیت پسندی قیمتی عالمی فکری اثاثہ  ہے اور وہ دن دور نہیں  جب دنیا کی باشعور قومیں اس نطریے کی اپنی یونیورسٹیز میں ریسرچ کرینگی

Image  Image

Image

میرا قائد صرف الطاف حسین جس نے تمام ساتھیوں اور پوری قوم کو امن و امان کا پیغام اور  محبت کا درس  دیا اور اپنے ملک و قوم کے لیے بیش بہا قربانیاں دیں ایسے قائد کے لیے کے سو جانیں بھی قربان ہیں اور جب بھی الطاف حسین بھائ کو ضرورت پڑی تب اس وقت یہ قوم  اور الطاف حسین بھائ کا ایک ایک  کارکن انکے  ساتھ کھڑا ھوگا

 ہم نے کہہ  تو دیا ہمیں کیا چاہیے ہمیں منزل نہیں رہنما چاہیے
میرا  قائد  صرف  و  صرف  الطاف حسین

الطاف حسین بھائ ایک ایسے قائد ہیں جنھوں نے اپنی کم عمری میں ہی اپنی قائدانہ صلاحیتوں کا لوہا منوایا .انکی حق پرستی اور انقلابی سوچ کو روکنے کے لیے الطاف حسین بھائ کو ہر طرح سے پریشان کیا گیا قاتلانہ  حملے کیے جس کی وجہ سے انھیں باہر جانا پڑا  مگر محالفین نے انھیں وہاں بھی نہیں چھوڑا  اور وہاں بھی سازشیں کرکے انکے معاملات الجھانے کی کوششیں  کیں تاکہ وہ تحریک کی قیادت نہ کرسکے اور انکی سازشیں  آج تک جاری ہیں

میرا قائد صرف الطاف حسین

Image

Image                                          Image

Image

اج بھی منزلوں پر لگی ہے نظر
دل میں رکتھے ہیں عزم سفر آ ج بھی
دل شکستہ نہ سمجھے زمانہ ہمیں
اپنی ہمت ہے سینہ سپر اج بھی 

Advertisements