پاکستان کو آزاد ہوے 67 سال سے زیادہ کا عرصۂ ہو گیا مگر عام عوام تک انصاف کے تقاضےپورے نہ ہو سکے.پاکستان کے حکمران عام عوام کو انصاف دینا تو دور کی بات وہ تو ان سے سانس لینے کا حق بھی چھین رہے ہیں اور اب ایسا لگتا ہے جیسے عدلیہ تو پاکستان میں ہے ہی نہی کیوںکہ لوگ اب عدالت جانے سے بہتر خودکشی کرلیتے ہیں.اب پاکستان میں انصاف عام عوام کی پہنج سے دور ہو گیا ہے.گزشتہ چند ہفتےقبل مظفرگڑھ کی ایک طالبہ کو زیادتی کا نشانہ بنایا گیا تمام تر ث‎ ‎بوت ہونے کے باوجود ان مجرموں کو چھوڑ دیا گیا اس نا انصافی سے دلبرداشتا ہو کر اس طالبہ  نے خود کو آ گ لگا لی .اس طالبہ کی خودکشی  پاکستان کے حکمران کے منہ پر بے غیر تی کا تماچہ ہے ..ایک وہ طالبہ  جس نے انصاف  نہ  ملنے پر اپنی جان لے لی اور یہ  بے غیر ت حکمران ان مجرموں کو پکڑوا کر سزا نہی  دلواسکے  شرم آ نا ان جیسے حکمرانوں کو جو ووٹ کی بھیک تو عوام سے مانگتے ہیں مگر انکو انصاف فراہم نہی کرسکتے.ایسے جمہوریت سے اللہ  بچاے.کاش اس طلبہ جیسی غیر ت اللہ  ان حکمرانوں کو بھی  دے اور بے غیر ت حکمران کہیں  جا کر ڈوب مریں.

Advertisements